PK Press

چین کا مسئلہ فلسطین کو عالمی ایجنڈے میں ترجیحی اہمیت دینے پر زور

 

چین کو فلسطین اسرائیل صورتحال کی کشیدگی میں اضافے پر تشویش ہے، مسئلہ فلسطین مشرق وسطیٰ کا مرکزی مسئلہ ہے، چینی وزیر خا رجہ

بیجنگ ()
چینی وزیر خارجہ چھینگ گانگ نے کہا ہے کہ مسئلہ فلسطین مشرق وسطیٰ کا مرکزی مسئلہ ہے جو خطے کے امن و امان نیز عالمی انصاف سے وابستہ ہے۔ عالمی برادری کو مسئلہ فلسطین کے حل کو بین الاقوامی ایجنڈے میں ترجیحی اہمیت دینا ہوگی۔پیر کے روز

چھینگ گانگ نے قاہرہ میں اپنے مصری ہم منصب کے ساتھ ایک مشترکہ پریس کانفرنس میں کہا کہ چینی صدر شی جن پھنگ نے مسئلہ فلسطین کے حوالے سے کہا ہے کہ فلسطینی عوام کے قانونی حقوق پر کوئی سودے بازی نہیں کی جا سکتی ہے۔ ان کی ایک خود مختار ملک کے قیام کی جدوجہد سے انکار نہیں کیا جا سکتا اور مسئلہ فلسطین کے حل کو زیادہ عرصے تک حل طلب نہیں رہنا چاہیے۔انہوں نے کہا کہ چین کو فلسطین اسرائیل صورتحال کی کشیدگی میں اضافے پر تشویش ہے اور چین سمجھتا ہے کہ عالمی برادری کو "دو ریاستی حل” کے تصور اور زمین کے بدلے امن کے حصول کے اصول پر قائم رہتے ہوئے امن مذاکرات کےذریعے مسئلہ فلسطین کو جلد از جلد منصفانہ طور پر حل کرنا چاہیے۔اس حوالے سے اثر و رسوخ کے حامل بڑے ممالک کو اپنی ذمہ داری اٹھانی چاہیئے۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

چینی صدر کا چینی جدیدیت کی تکمیل کے لئے سیاسی جماعتوں کے مزید اہم کردار پر زور

پڑھنے کے اگلے

پرامن بقائے باہمی چین اور امریکہ دونوں کے لئے باٹم لائن ہونی چاہئے، چین

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے