PK Press

دنیا میں غذائی سیکورٹی کی صورتحال سنگین ہے، چینی صدر

غذائی تحفظ انسانوں کی بقاء سے متعلق بنیادی موضوع ہے، شی جن پھنگ کا خطاب

بیجنگ :
چینی صدر شی جن پھنگ نے کہا ہے کہ اس وقت دنیا میں غذائی سیکورٹی کی صورتحال سنگین ہے اور

چین مختلف ممالک کے ساتھ مل کر عالمی ترقیاتی انیشیٹیو کو فروغ دیتے ہوئے غذائی تحفظ اور انسداد غربت میں تعاون کو مضبوط بنانے کے لئے تیار ہے تاکہ بھوک اور غربت سے پاک ہم نصیب دنیا کی تشکیل دی جائے۔

اتوار کے روز چینی میڈ یا کے مطا بق چینی صدر نے ان خیا لات کا اظہار
بیجنگ میں منعقدہ ‘ہائبرڈ چاول میں معاونت اور عالمی غذائی تحفظ’ کے موضوع پر عالمی سیمینار میں تحریری خطاب میں کیا ۔

شی جن پھنگ نے نشاندہی کی کہ غذائی تحفظ انسانوں کی بقاء سے متعلق بنیادی موضوع ہے۔نصف صدی قبل چین میں ہائبرڈ چاول کی کامیاب تحقیق کی گئی اور اسے بڑے رقبے پر کاشت کیا گیا

جس کی بدولت چین نے دنیا کی 9 فیصد قابل کاشت زمین پر تقریباً بیس فیصد آبادی کے لئے خوراک فراہم کی۔سال 1979 سے ہائبرڈ چاول دنیا

کے تقریباً 70 ممالک میں متعارف کرایا گیا اور اس نے مختلف ممالک میں اناج کی پیداوار میں اضافے اور زرعی ترقی کے لیے

نمایاں خدمات سرانجام دی ہیں اور ترقی پذیر ممالک کے غذائی قلت کے حل کے لیے چینی فارمولہ پیش کیا ہے۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

پاکستانی ٹیم کے نام آج بھی وہی پیغام ہے جو 92میں دیا تھا، عمران خان

پڑھنے کے اگلے

چین کا کھلے پن کو وسعت دینے کا اعلان

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے