PK Press

سرکاری گھروں میں رہنے والے ملازمین کے لئے عدالت کا بڑا حکم

islamabad high court

islamabad high court

اسلام آباد میں 2 گھر رکھنے والے سول سرونٹس کی تفصیلات طلب
اسلام آبادہائی کورٹ نے وفاقی دارالحکومت میں دو دو گھر رکھنے والے سول سرونٹس کی تفصیلات طلب کرلیں۔
اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے وفاقی دارالحکومت میں سول سرونٹس کو گھروں کی الاٹمنٹ سے متعلق کیس میں دو دو گھر رکھنے والے سول سرونٹس کی تفصیلات طلب کرتے ہوئے آئی جی اسلام آباد کو ایک گھر رکھنے کی ہدایت کردی۔
عدالت نے انسپکٹر جنرل پولیس اسلام آباد کو ہدایت کی کہ آئی جی ہاس یا جی ایٹ کا گھر، دونوں میں سے کوئی ایک رکھیں۔عدالت نے کہا کہ کتنے سول سرونٹس نے دو دو گھر رکھے ہوئے ہیں، سیکرٹری ہاسنگ 3 ماہ میں رپورٹ دیں۔ اس کے علاوہ صوبوں میں جانے والے کتنے سول سرونٹس نے اسلام آباد میں گھر رکھے ہوئے ہیں، اس کی بھی رپورٹ دی جائے۔
اسلام آباد ہائی کورٹ نے اسٹیٹ آفس کو حکم دیتے ہوئے کہا کہ سیکشن افسر کو 24 گھنٹے میں نئے گھر کا قبضہ دیا جائے۔ عدالت نے سیکشن افسر کی جی ایٹ میں گھر کا قبضہ واپس دینے کی درخواست مسترد کردی۔ واضح رہے کہ وزارت داخلہ کے سیکشن افسر نے گھر سے زبردستی بے دخلی کے خلاف درخواست دائر کی تھی۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

سپریم کورٹ کے تین نئے ججز نے حلف اٹھا لیا

پڑھنے کے اگلے

پی ٹی آئی دور حکومت میں الیکشن کمیشن میں 397افراد بھرتی کئے گئے

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے