PK Press

امریکہ،برطانیہ اور آسٹریلیا ایٹمی پھیلاؤ کے راستے میں اپنی غلطیوں کو مزید نہ دہرائیں،چینی سفیر

عالمی ایٹمی توانائی ادارے کا 66 واں اجلاس ویانا میں
26سے 30ستمبر تک منعقد ہوا،جس میں امریکہ،برطانیہ اور آسٹریلیا کی جوہری آبدوز تعاون کو ” قانونی حیثیت ” دینے کی سازش ناکام بنائی گئی۔اتوار کے روز چینی میڈ یا کے مطا بق
ویانا میں اقوام متحدہ کے دفتر اور دیگر عالمی تنظیموں کے لیے چینی سفیر وانگ چھون نے بتایا کہ تینوں ممالک نے اس اجلاس میں جوہری آبدوز تعاون کو قانونی حیثیت دینے کے لیے ترمیم کو فروغ دینے کی کوشش کی تھی، تاہم اسے ناکام بنایا گیا۔
وانگ چھون نے زور دیا کہ جوہری عدم پھیلاؤ کا معاہدہ عالمی عدم پھیلاؤ کے نظام کی بنیاد ہے۔چین تینوں ممالک پر زور دیتا ہے کہ وہ عدم پھیلاؤ کے نظام کے راستے پر واپس آئیں،اور ایٹمی پھیلاؤ کے راستے میں اپنی غلطیوں کو مزید نہ دہرائیں۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

چین، گزشتہ دہائی میں سنکیانگ کی شاہرات میں 62ہزار کلومیٹر کا اضافہ

پڑھنے کے اگلے

ہو اوے نے پاکستان کے صنعت کاروں کو بااختیار بنانے کیلئے آل فلیش اسٹوریج سلو شن کا آغاز کردیا

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے