PK Press

چین کے اعلیٰ ترین قانون ساز کا روس کا سرکاری خیر سگالی دورہ

روسی پارلیمان کے ایوان زیریں ڈوما کے چیئرمین وچوسلوف وولودن کی دعوت پر

چینی قومی عوامی کانگریس کی قائمہ کمیٹی کے صدر لی زان شو نے 7 سے 10 تاریخ تک روس کا سرکاری خیر سگالی دورہ کیا۔

اتوار کے روز چینی میڈ یا کے مطا بق اس موقع پر صدر پوتن سے ملاقات کرتے ہوئے لی زان شو نے صدر شی جن پھنگ کی جانب سے نیک تمناؤں کا اظہار کیا۔

انہوں نے کہا کہ صدر شی جن پھنگ اور صدر پوتن کی تزویراتی رہنمائی اور ذاتی دلچسپی کی روشنی میں نئے عہد میں چین اور روس کے درمیان ہم آہنگ جامع تزویراتی شراکت داری نے ہمیشہ ترقی کی مضبوط رفتار کو برقرار رکھا ہے۔ دونوں ممالک کے درمیان سیاسی باہمی اعتماد، سٹریٹجک کوآرڈینیشن

اور عملی تعاون نئی بلندیوں پر پہنچ چکا ہے،

جو بڑے ممالک اور پڑوسی ممالک کے درمیان اچھی ہمسائیگی ، دوستی اور جیت جیت تعاون کا نمونہ بن گیا ہے۔ چین ایک دوسرے کے بنیادی مفادات اور اہم خدشات سے متعلق امور پر ایک دوسرے کی مضبوطی سے حمایت کرنے، صدر شی جن پھنگ کے تجویز کردہ عالمی ترقیاتی انیشیٹو اور عالمی سلامتی انیشیٹو کو نافذ کرنے اور اعلیٰ سطحی سیاسی باہمی اعتماد کو مزید مضبوط بنانے کے لیے روس کے ساتھ مل کر کام کرنے کا خواہاں ہے۔
پوتن نے صدر شی جن پھنگ کے لیے اپنی نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ انہوں نے کہا کہ نئے عہد میں روس دونوں ممالک کے درمیان تعلقات اور مختلف شعبوں میں تعاون کے نتائج سے مطمئن ہے اور پرامید ہے کہ یہ تعاون ، اعلیٰ اہداف کی جانب آگے بڑھے گا۔ روس اور چین کے قانون ساز اداروں کے درمیان تبادلوں کو مضبوط بنانا دوطرفہ تعلقات کی ترقی کے فروغ میں مثبت کردار ادا کرے گا۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

وزیراعظم کا سیلاب زدہ علاقوں میں نظام زندگی کی بحالی کیلئے اقدامات کا حکم

پڑھنے کے اگلے

چائنا میڈیا گروپ کے” وسط خزاں فیسٹیول گالا2022″ کی شاندار نشریات کی زبردست تحسین

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔