PK Press

مونس الہیٰ پر منی لانڈرنگ کا مقدمہ درج، پرویز الہی کو بھی تحقیقات میں شامل کرنے کا فیصلہ

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک )ایف آئی اے لاہور نے چوہدری مونس الہیٰ پر منی لانڈرنگ کا مقدمہ درج کرلیا ہے۔

نجی ٹی وی کے مطابق ایف آئی اے حکام نے مونس الہیٰ کے خلاف منی لانڈرنگ کےشواہد ملنے کے بعد تحقیقات کافیصلہ کیا۔ایف آئی اے کی جانب سے بتایا گیا کہ

مونس الہیٰ پر منی لانڈرنگ اور کرپشن کے الزامات ہیں۔

سیکریٹری پنجاب اسمبلی محمد خان بھٹی کے دو قریبی عزیزوں نواز بھٹی اور مظہر عباس کو بھی گرفتار کیا گیا ہے۔ ان افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

یہ بھی بتایا گیا کہ نواز بھٹی پنجاب اسمبلی میں نائب قاصد تھے۔ شوگر ملز میں انکوائری میں نواز بھٹی کا نام سامنے آیا تھا۔

رحیم یار خان میں الائیڈ شوگرملز گروپ میں نواز بھٹی 31 فیصد شئیرز کے مالک تھے۔ واضح رہے کہ وہ گریڈ ٹو کے ملازم ہیں۔ مظہر عباس بھی 35 فیصد شئیرز کے مالک تھے۔

رحیم یارخان شوگر مل کے ڈائریکٹرز کو انکوائری میں بلوانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ اسسٹنٹ ڈائریکٹر رانا فیصل منیر کو مقدمہ کا انویسٹی گیشن آفیسر بنا دیا گیا ہے۔

مونس الٰہی، نواز بھٹی ، مخدوم عمرشہریار، طارق جاوید، واجد بھٹی اور سیکرٹری اسمبلی محمد خان بھٹی کے خلاف منی لانڈرنگ اورکرپشن کا مقدمہ درج ہوا ہے۔

پاکستان پینل کوڈ کی دفعات34،109،420،68،471 اور اینٹی منی لانڈرنگ دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا۔

مونس الہی کے 2007 سے 2020 تک ریکارڈ کو دیکھتے ہوئے مقدمہ درج کیا گیا۔

عمران خان کی حکومت نے شوگرانکوائری کمیشن کے تحت رحیم یار خان شوگر مل

کیخلاف انکوائری شروع کروا رکھی تھی اور

مونس الٰہی کے خلاف 7اگست 2020 سے انکوائری جاری تھی۔

دوسری جانب مونس الٰہی نے خودایف آئی اے دفتر پیش ہونے کا فیصلہ کرلیا۔

مونس الٰہی کا کہنا تھا کہ انہوںنے مجھے کیا گرفتار کرنا ہے

میں خود ایف آئی اے دفتر جا رہا ہوں،پہلے بھی ایسی انتقامی کاروائیوں کا سامنا کر چکا ہوں۔

انہوں نے کہا کہ شریفوں کی اصلیت کو جانتے تھے اسی لیے کسی لالچ میں نہیں آئے،ن لیگ کچھ بھی کر لے عمران خان کے ساتھ کھڑا ہوں اور رہوں گا۔

مونس الٰہی نے کہا کہ پی ٹی آئی کے ساتھ جب جانے کا فیصلہ کیا تو اس بات کا پتہ تھا کہ شریفوں نے اس طرح کی حرکات کرنی ہیں۔

عمران خان کے ساتھ اتحاد کیا ہے اب انتقامی کاروائیوں کو جھیلنے کیلئے تیار ہوں۔

انہوں نے کہا کہ مقدمہ درج ہونے سے پہلے ایف آئی اے کی طرف سے

کوئی نوٹس، رابطہ، فون کال نہیں کی گئی۔ میرے تمام اثاثے ڈکلیئر ہیں۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

مہنگائی سے پریشان عوام پر ایک بار پھر پٹرول بم گرانے کی تیاری مکمل

پڑھنے کے اگلے

جو کرنا ہے کرلو، عمران خان کیساتھ کھڑا ہوں اور رہوں گا،مونس الہٰی

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔