PK Press

انٹرنیٹ کس نے ایجاد کیا؟

انٹرنیٹ کو کسی ایک شخص نے ایجاد نہیں کیا،آج ہم جس چیز کو انٹرنیٹ کہتے ہیں اس کےلئے بہت وقت لگا اور بہت سے لوگوں کے آئیڈیا ز اور کام نے اپنا کردارادا کیا۔تو پھر انٹرنیٹ ایجاد کس نے کیا؟

جے سی آرلک لائیڈر

1962میں ماہر نفسیات اور کمپویٹر سائنٹسٹ لک لائیڈر نے انٹرگلیگٹک کمپیوٹر کا خیال پیش کیا جو ہر شخص کو ڈیٹا اورپروگرام تک رسائی دے ۔

انہوں نے آن لائن بینکنگ ،کلائوڈ کمپیوٹنگ اور ای کامرس تک کے بارے میں سوچا جو آج کل انٹرنیٹ کے اہم ترین فیچرز ہیں ۔اسی برس لک لائیڈر (ڈارپا )کمپیوٹرریسرچ سینٹر کے سربراہ مقرر کئے گئے ۔DARPAاس امریکی کمپنی کا قیام 1958میں عمل میں آیا تھا اور سرد جنگ کا اس سے کافی زیادہ تعلق تھا۔جب اس وقت کے سوویت یونین نے 4اکتوبر 1957کوپہلا مصنوعی سیارہ "سپورٹنگ ون "مدار میں بھیجاتو

امریکی نے خلائی دور میں خود کو پیچھے محسوس کیا تھا تو اس کمی کو پورا کرنے اور نئی ٹیکنالوجی میں دنیا کا قائد بننے کےلئے تو اس وقت کے امریکی صدر ڈیوائڈ ڈی آئزن نے APRAقائم کی جسے آج DARPAکے نام سے جانا جاتا ہے ۔

60کی دہائی میں کمپیوٹر بالکل ابتدائی شکل کی طرح نہیں دکھائی دیتے تھے ،1940کی دہائی کی انیاک یا زیڈ تھری بلکہ وہ ان نووا کمپیوٹر کی طرح یا پھرایچ پی 2100کی طرح تھے ۔اس کے باوجود یہ کافی وزنی ،بڑھے یا کیلکولیشن کےلئے استعمال ہوتے تھے ۔
اکتوبر1969کو

لاس اینجلس کی یونیورسٹی کے پروفیسر Leonard Kleinrockاور ایک طالب علم کو سان فرانسسکو کے قریب سٹینفورڈ انسٹیٹوٹ بھیجا گیا۔انہوں نے انٹرنیٹ کے ذریعے اولین پیغام بھیجا۔LOاصل میں لفظLoginدبانا تھا مگر جی دبانے سے قبل سے رابطہ کٹ گیا۔
کمپیوٹرز کے درمیان پیغام پہنچانے کےلئے ای میل کی شکل اختیار کر لی ۔

1971میں Ray Tomlinsonنے ای میل بھیجی جس میں مخصوص کمپیوٹر صارف اور اس کی مشین تک پہنچنے کےلئے @
کا نشان استعمال کیا گیا۔

Tomlinsonکو آج ای میل کے موجب کے طور پر جانا جاتا ہے اور یہ پروگرام بہت جلد ہی بہت مقبول ہوگیا۔لہذا اولین ای میل 1971میں بھیجی گئی

لیکن کیا آپ یقین کر سکتے ہیں کہ اولین ویب سائٹinfo.cern.chاس کے 20برس بعد1991میں آن لائن آئی یعنی جب بیرنر لی نے ورلڈ وائڈ ویب بنایا اور یوں ہر ایک کی ویب سائٹ تک رسائی ممکن ہوسکی ۔

چینی خلانورد کامیابی کے ساتھ تیان حہ کور ماڈیول میں داخل

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

قلعہ سیف اللہ :مسافر وین کھائی میں جاگری، 22 افراد جاں بحق

پڑھنے کے اگلے

امریکہ کو جھوٹ کی سلطنت پر فخر نہیں کرنا چاہیے، چین

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔