PK Press

لاہو،پی ٹی آئی کارکنوں کے خلاف کریک ڈاون، فائرنگ سےپولیس کانسٹیبل شہید

لاہور(آئی پی ایس ) پاکستان تحریک انصاف(پی ٹی آئی) کے لانگ مارچ سے قبل پولیس کے کریک ڈاؤن کے دوران کانسٹیبل کمال احمد شہید ہو گئے۔تفصیلات کے مطابق ماڈل ٹاؤن میں چھاپے کے دوران ایک گھر کی چھت سے فائرنگ کے نتیجے میں کانسٹیبل کمال احمد جان کی بازی ہار گئے۔ڈی آئی جی آپریشنز سہیل چودھری کے مطابق پولیس نے شہر میں جاری کریک ڈاؤن کے حوالے سے گھر پر ہلا گلہ کرنے پر چھاپہ مارا جس دوران گھر کی چھت سے فائرنگ کی گئی جس کی زد میں آکر کانسٹیبل کمال احمد شدید زخمی ہوگیا۔ذرائع کے مطابق زخمی کانسٹیبل کو فوری طبی امداد کے لیے اسپتال منتقل کیا گیا جہاں وہ زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے دم توڑ گیا۔پولیس نے فائرنگ کے الزام میں گھر کے مالک ساجد اور اس کے بیٹے مکرم کو گرفتار کرکے اسلحہ برآمد کر لیا۔

 

دوسری جانب وزیراعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز نے آئی جی پولیس سے واقعے کی رپورٹ طلب کرتے ہوئے ملزمان کی جلد گرفتاری کی ہدایت کی ہے۔

مسلم لیگ (ن) کی نائب صدر مریم نواز نےٹوئٹر پر کہا کہ آج فتنے کی کُرسی کی لالچ کی وجہ سے ایک ماں کا لختِ جگر اس سے الگ ہوگیا اور پاکستان کا بیٹا بے دردی سے شہید کر دیا گیا۔کئی دنوں سے ریاست کوخونی انقلاب کی دھمکیاں دینے والوں نے آج سے اپنے ناپاک منصوبے کا آغاز کردیا ہے۔قوم کے محافظوں پر گولیاں برسانے والے کسی رعایت کے مستحق نہیں۔

وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ نے کہا کہ گالیاں برسانے والوں نے گولیاں برسانا شروع کردی ہیں، بے گناہ پولیس اہلکار کمال احمد کے سینے میں لگی گولی ثبوت ہے کہ عمران خان دہشتگرد ہے، یہ بات ثابت ہوگئی ہے کہ یہ کوئی سیاسی سرگرمی نہیں، پرامن مارچ چاہتے ہی نہیں تھے۔ ’خونی مارچ ہوگا‘ کے اعلانات کرنے والوں سے بلکل حساب لیں گے۔

https://pkpress.net/2022/05/23/rana-sanaullah-3/

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

اسلام آباد،ریڈ زون کی سکیورٹی کے لیے فوج طلب،دفعہ 144نافذ

پڑھنے کے اگلے

پی ٹی ئی کی جنگ ہم نہیں لڑ سکتے، کارکن خاموش رہیں،طاہر القادری

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔