PK Press

اسلام آباد ہائیکورٹ کا عمران خان کو ملے تحائف پبلک کرنے کا حکم

imrankhan

اسلام آباد ہائیکورٹ نے سابق وزیراعظم عمران خان کو تین سال کے دوران ملنے والے تحائف کی تفصیل صحافی کو فراہم کرنے کا حکم دے دیا۔ عدالت نے ریمارکس دیئے کہ کچھ فیصد رقم دے کر تحائف گھر لے جانے کی پالیسی نہیں ہونی چاہیے، یہ ریاست کے تحائف ہیں کسی کے ذاتی نہیں۔
اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس میاں گل حسن نے توشہ خانہ کیس میں ریمارکس دیے کہ جو بھی تحفہ دیا جاتا ہے وہ اس آفس کا ہوتا ہے،گھرلے جانے کے لیے نہیں، جو لوگ تحائف اپنے گھر لے گئے ہیں، ان سے بھی واپس لیں۔تفصیلات کے مطابق انفارمیشن کمیشن نے وزیراعظم کو توشہ خانہ سے ملنے والے تحائف کی تفصیلات شہری کو دینے کاحکم دیا تھا اورکابینہ ڈویژن نے انفارمیشن کمیشن کے فیصلے کیخلاف درخواست دائرکررکھی ہے۔

 

جو بات لیڈر کرتا ہے، عوام اسکے پیچھے چل پڑتی ہے، سپریم کورٹ

https://pkpress.net/2022/04/19/supreme-court-5/

 

کابینہ ڈویژن کا موقف ہے کہ سربراہان مملکت کے درمیان تحائف کا تبادلہ بین الریاستی تعلقات کاعکاس ہوتا ہے لہذا تحائف کی تفصیل بتانے سے ان ممالک کے ساتھ تعلقات متاثرہوسکتے ہیں۔اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے سابق وزیراعظم عمران خان کے توشہ خانہ سے حاصل تحائف کی تفصیل بتانے کے خلاف درخواست پر سماعت ہوئی جس سلسلے میں وفاق کی جانب سے ڈپٹی اٹارنی جنرل ارشد کیانی عدالت میں پیش ہوئے اور ہدایت لینے کے لیے مہلت طلب کی۔دورانِ سماعت رانا عابد ایڈووکیٹ نے کہا کہ پٹیشن میں کہا گیا ہے کہ تحائف کی معلومات شیئر کیں تو دیگر ممالک سے تعلقات متاثر ہوں گے، اب جب تحائف کی فروخت کا معاملہ سامنے آیا ہے تو کیا عزت رہ جائے گی؟

 

 

رانا عابد کے موقف پر عدالت نے عمران خان کو ملنے والے تحائف کی تفصیل فراہم کرنے کی ہدایت کردی۔عدالت نے کہا کہ پاکستان انفارمیشن کمیشن کے آرڈر پر حکم امتناع نہیں،کابینہ ڈویژن معلومات فراہم کرنیکا پابند ہے۔اس موقع پر جسٹس میاں گل حسن اورنگزیب نے ریمارکس دیے کہ لوگ آتے اور چلے جاتے ہیں، وزیراعظم آفس وہیں رہتا ہے، جو بھی تحفہ دیا جاتا ہے وہ اس آفس کا ہوتا ہے،گھرلے جانے کے لیے نہیں، جو لوگ تحائف اپنے گھر لے گئے ہیں، ان سے بھی واپس لیں۔

https://jang.com.pk/category/latest-news

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

وزیرمملکت برائے خارجہ امور حنا ربانی کھر نے عہدے کا چارج سنبھال لیا

پڑھنے کے اگلے

حمزہ شہباز نے حلف سے انکار پر دوبارہ لاہور ہائیکورٹ سے رجوع کرلیا

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔