PK Press

مسلم لیگ (ق)ہماری اتحادی ہے ہر صورت حکومت کا ساتھ دے گی،اسد عمر

اسلام آباد(آئی این پی)وفاقی وزیر برائے منصوبہ بندی و مرکزی سیکرٹری جنرل تحریک انصاف اسد عمرنے کہا ہے کہ مسلم لیگ (ق)نے پیپلزپارٹی کے شریک چیئرمین وسابق صدر آصف زرداری کے ساتھ کسی قسم کی اتحاد سے انکار کرتے ہوئے انہیں باعزت طریقے سے رخصت کردیا،(ق)لیگ ہماری اتحادی ہے اور ہر صورت حکومت کا ساتھ دے گی،بہترین باہمی تعاون کے تحت عوامی خدمت کا سفر جاری رکھیں گے،ہمیشہ اتحاد ی جماعت کو ساتھ لے کر چلے ہیں اور آئندہ بھی ساتھ لے کر چلیں گے،ہم اتحاد ی تھے، اتحادی ہیں اور اتحادی رہیں گے۔تفصیلات کے مطابق وفاقی وزیر اسد عمرنے مسلم لیگ (ق) اسلام آباد کے صدر رضوان صادق خان کی جانب سے دیے گئے استقبالیہ سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مسلم لیگ (ق)نے سابق صدر آصف زرداری کے ساتھ کسی قسم کی اتحاد سے انکار کرتے ہوئے انہیں باعزت طریقے سے رخصت کردیا،(ق)لیگ ہماری اتحادی ہے اور ہر صورت حکومت کا ساتھ دے گی۔انہوں نے کہا کہ بہترین باہمی تعاون کے تحت عوامی خدمت کا سفر جاری رکھیں گے،ہمیشہ اتحاد ی جماعت کو ساتھ لے کر چلے ہیں اور آئندہ بھی ساتھ لے کر چلیں گے،ہم اتحاد ی تھے، اتحادی ہیں اور اتحادی رہیں گے،مسلم لیگ ق کے ساتھ ورکنگ ریلیشن شپ بہتر بنائیں گے اور اتحادی جماعت سے مشاورت کے عمل کو مزید آگے بڑھائیں گے۔صدر مسلم لیگ(ق)اسلام آباد رضوان صادق خان نے وفاقی وزیر اسد عمر کا شکریہ ادا کیا اور کہا کہ ہم حکومت اتحاد ی ہیں اور کسی صورت ساتھ نہیں چھوڑیں گے ،اپنے قائدین چوہدری شجاعت حسین اور چوہدری پرویز الٰہی کی قیادت میں پورا یقین ہے ۔رضوان صادق خان نے کہا کہ وفاقی وزیر اسد عمر نے وفاق کے ساتھ اسلام آباد کی سطح پر بھی مسلم لیگ (ق) کے ساتھ سیاسی جدوجہد جاری رکھنے کے عزم کا اظہار کیا۔ اس موقع پر جنرل سیکرٹری مسلم لیگ (ق)اسلام آباد چودھری محمد جہانگیر ،تحریک انصاف کے سینئر رہنما ڈاکٹر محمد امجد ،جمشید مغل ندیم گجر، قاضی تنویر املک ،امتیاز ملک رضوان ،سی ڈی اے مزدور یونین کے رہنما چوہدری محمد یاسین ،اعجاز عباسی ،طاہر عباسی ،عاطف مغل ،رانا شہزاد ،اسد ممتاز خان، قاسم ممتاز خان ،ظفر بختاوری ، ثمرمہدی سمیت دیگر ر ہنما بھی موجود تھے ۔جنرل سیکرٹری مسلم لیگ(ق)اسلام آباد چوہدری جہانگیر نے کہا کہ عوام نے حکومت کو پانچ سال کا مینڈیٹ دیا جس میں ابھی پونے دو سال باقی ہیں، اپوزیشن اگر جمہوریت پر یقین رکھتی ہے تواس کو چاہئے کہ حکومت کے اس عوامی مینڈیٹ کا احترام کرے اور محض انتشار پھیلانے پر مبنی اپنی منفی سیاست ترک کر دے۔

 

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

بھارت میں انتہا پسند ہندوں کا تنہا سامنا کرنے والی بہادر بچی مسکان خان کو سلام

پڑھنے کے اگلے

شاہد آفریدی کے پرستاروں کے لئے بڑی خوشخبری

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔