PK Press

آئی جی پنجاب کا پولیس افسران کے خلاف موصول شکایات پر ایکشن لینے کا فیصلہ

لاہور(آئی پی ایس )آئی جی پنجاب راؤ سردار علی خان نے پولیس اہلکار و افسران کے خلاف موصول ہونے والی شکایات پر سخت ایکشن لینے کا فیصلہ کرلیا ہے۔تفصیلات کے مطابق آئی جی راؤ سردار علی کی زیر صدارت سینٹرل پولیس آفس میں عوامی شکایات پر محکمہ پولیس کے رسپانس اور ایکشن کو مزید موثر بنانے کے بارے میں اجلاس ہوا۔آئی جی کمپلینٹ سینٹر 1787 پر موصول ہونے والی شکایات کا آئی جی پنجاب خود ہفتہ وار جائزہ لیں گے۔آئی جی پنجاب راؤ سردار علی نے کہا کہ ایف آئی آر میں تاخیر یا نہ اندراج کرنے والے اہلکاروں و افسران کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔اجلاس میں انہوں نے کہا کہ گزشتہ سال جن اضلاع سے شہریوں کی ایف آئی آر کے اندراج نہ ہونے یا بلا وجہ تاخیر کی شکایات موصول ہوئی ہیں ان سے جواب طلبی کا فیصلہ کیا گیا ہے۔آئی جی پنجاب نے کہا کہ لاہور، فیصل آباد، ملتان، گوجرانولہ سمیت دیگر شہروں کے فیلڈ افسران سے جواب طلب کیا جائے گا۔انہوں نے کہا کہ اہلکار و افسران کے کرپشن میں ملوث ہونے پر زیرو ٹالرنس کے تحت کارروائی کی جائے گی اور 1787 پر آنے والی شکایات پر ایکشن لینے میں تاخیر برداشت نہیں کی جائے گی۔آئی جی پنجاب نے کہا کہ پرائم منسٹر ڈلیوری پورٹل پر موصول ہونے والی شکایات مقررہ وقت پر حل کی جائے اور 1787 آئی جی کمپلینٹ سیل کو مزید موثر بنانے کے لیے خالی آسامیوں پر بھرتیاں جلد مکمل کی جائیں۔انہوں نے کہا کہ آئی جی آفس کی کھلی کچہری میں آنے والے سائلین کے مسئلے کے مکمل ازالے تک شکایت داخل دفتر نہ کی جائے۔اجلاس میں آئی جی پنجاب نے انٹرنل اکاونٹبیلیٹی برانچ کو تھانوں اور دفاتر میں اچانک دورے اور خفیہ انسپکشن کرنے کا حکم دیا ہے۔راؤ سردار علی نے مزید کہا کہ تمام انکوائریز مکمل شفافیت اور غیر جانبداری کے ساتھ مکمل کی جائیں اور کرپٹ عناصر کو محکمہ سے نکال باہر کیا جائے۔

براہ کرم ہمیں فالو اور لائک کریں:

پڑھنے کے پچھلے

ملک میں کورونا کے پھیلا ؤنے پھر خطرے کی گھنٹی بجا دی

پڑھنے کے اگلے

اسلام آباد میں بلدیاتی انتخابات ای وی ایم کے ذریعے کرانے کا فیصلہ

ایک جواب دیں چھوڑ دو

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔